خبر
12/9/2019
جدید ترین وسائل کو بروئےکار لانا آستان قدس رضوی کے ایجنڈے میں شامل ہے

 
جدید ترین وسائل کو بروئےکار لانا آستان قدس رضوی کے ایجنڈے میں شامل ہے

حضرت امام علی رضا علیہ السلام کے حرم مطہر کی خواتین   خادماؤں     کے پہلے اجلاس  کو خطاب کرتے ہوئے    آستان قدس رضوی کے  متولی نے اس بات پر زور دیا کہ جدید ترین وسائل کو بروئے کار لانا ہمارے ایجنڈے میں شامل ہے۔ 

آستان نیوز کی رپورٹ کے مطابق؛    آستان قدس رضوی کے متولی  حجت الاسلام والمسلمین شیخ احمد مروی نے حضرت امام علی رضا علیہ السلام کی نورانی بارگاہ کی   خواتین خادماؤں  کے اجلاس   میں  خواتین کی جانب سے خاتون   زائراؤں  کو سہولیات فراہم کرنے میں ان کے موثر کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ بارگاہ رضوی میں ان کی مخلصانہ خدمات بہت زیادہ اہمیت رکھتی ہیں  اس لئے ہماری کوشش ہے کہ ان سے مربوط  امور پر زیادہ توجہ دی جائے ۔ 

انہوں نے اس بات پر تاکید  کی  کہ زائرین کے علم و دینی معرفت میں اضافہ  جملہ ایسے موضوعات  ہیں   جو آستان قدس رضوی کی نظر میں بہت اہم   ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ اس سلسلے میں جدیدترین وسائل سے استفادہ کرنا ہمارے ایجنڈے میں شامل ہے ،   اس کے علاوہ ہم چاہتے ہیں کہ سائبراسپیس پر موثر  اور وسیع پیمانے پر کام کیا جائے تاکہ لوگوں سے پورے سال رابطے میں رہ سکیں۔ 

 آستان قدس رضوی کے متولی  نے مذہبی  اور ثقافتی  کاموں کو آستان قدس رضوی کی سرگرمیوں کا محور و مرکزقراردیتے ہوئے    کہا کہ حضرت امام علی رضا علیہ السلام عالم آل محمد(ص) ہیں  اس لئے لوگوں کو چاہئے کہ یہاں سے علم و معرفت حاصل کریں اسی بنا پر    آستان قدس رضوی کی اصلی ذمہ داری  مذہبی اور ثقافتی امو ر  پر توجہ دینا ہے ۔ 

انہوں نے حضرت امام علی رضا علیہ السلام سے منقول اس روایت کو ’’ رحم اللہ عبداً احیا امرنا، خدا    اس شخص پر رحمت فرمائے جو ہمارے امر کو زندہ کرے‘‘ آستان قدس رضوی کا مرکزی  سلوگن  قراردیتے ہوئے کہا کہ اس وقت تعمیرات     کے  حوالے سے آستان قدس رضوی میں کسی بھی   پروجیکٹ کی ضرورت نہيں   البتہ کچھ نامکمل پروجیکٹ ہیں جنہیں یقیناً مکمل کیا جائے گا  لیکن حال حاضر میں آستان قدس رضوی کی ساری توجہ ثقافتی اور مذہبی امور پر ہے۔ 

آستان قدس رضوی کے   متولی نے مزید   کہا کہ حرم رضوی میں تراجم قرآن اور دعاؤں کی کتب کے ترجمہ پر نظر ثانی کی جائے تاکہ مختلف طبقے سے تعلق رکھنے والے زائرین کے لئے یہ ترجمے  قابل فہم ہو سکیں۔ 

اس  اجلاس کی ابتدا میں آستان قدس رضوی کے امور خادمین کے مرکز کے سربراہ  علی اکبر عصارنیا   نے  خطاب کرتے ہوئے کہا   کہ  بارگاہ رضوی کے سارے خادم   زائرین کی خدمت  کی راہ میں سب سے آگے ہوتے ہيں ا س لئے وہ  زائرین   کی خدمت اور ان کے مسائل و مشکلات  کو در ک اور انہيں رفع کرنے میں سب سے بہتر انداز میں کام کرتے ہیں   

 اس اجلاس کے آغاز میں کچھ خواتین  خادماؤں  نے اپنے نظریات  اور تجاویز پیش کرنے کے ساتھ ساتھ اپنے کاموں سے مربوط مسائل و مشکلات کو بھی بیان کیا۔ 

   
وزٹرز کی تعداد:29
 
آپ کی رائے

نظر شما
نام
پست الكترونيک
وب سایت
نظر
...