خبر
11/6/2019
مشہد مقدس عالم اسلام کی علمی مرکزیت کی صلاحیت کا حامل ہے

 
مشہد مقدس عالم اسلام کی علمی مرکزیت کی صلاحیت کا حامل ہے

حضرت امام علی رضا علیہ السلام یونیورسٹی کے وآئس چانسلر نے کہا ہے کہ: مشہد مقدس میں حضرت امام علی رضا علیہ السلام کے روضہ منورہ کی برکت کی وجہ سے  دنیائے اسلام کی علمی مرجعیت و مرکزیت بننے کی صلاحیت پائی جاتی ہے ۔

آستان نیوز کی رپورٹ کے مطابق؛ ڈاکٹر مرتضی رجوعی نے مشہد مقدس میں اکیسویں کتب میلے کے موقع پر کہا: بین الاقوامی سطح پر علمی  کامیابیاں ؛ صلاحیتون ، وسائل وذرائع پر توجہ کیے بغیر حاصل نہيں ہوسکتیں

انہوں نے کہا: حضرت امام علی رضا علیہ السلام کے روضہ منورہ کی برکت سے شہر مشہد میں جو بالقوہ صلاحتیں پائی جاتی ہیں وہ بے نظیر ہیں اور گذشتہ زمانے سے عصر حاضر تک کے علماء شہر مشہد میں قیام پذیر ہونے کو ترجیح دیتے رہے ہيں اور یہ استعداد وصلاحیت ایران کے کسی  بھی دوسرے شہر میں نہیں ہے۔

حضرت امام علی رضا علیہ السلام یونیورسٹی کے وآئس چانسلر نے کہا: خراسان کے قدیم حوزہ علمیہ اور مشہد مقدس میں 30 یونیورسٹیوں اور تعلیمی مراکز کی وجہ سے مشہد مقدس میں یہ گنجائش اور توانائی پائی جاتی ہے کہ وہ عالم اسلام کا علمی مرکز بن جائے 

رجوعی نے شہر مشہد میں غیرملکی طلاب و اسٹوڈینٹس کی تعداد کی طرف اشارہ کیا  اور کہا: اس وقت 18 ہزار غیرملکی طلاب و اسٹوڈینٹس مشہد مقدس میں تحصیل علم میں مشغول ہیں کہ جن میں 800  حضرت امام علی رضا علیہ السلام یونیورسٹی میں ہیں۔

انہوں نے اس بات پر تاکید کرتے ہوئے کہ انٹرنیشنل پیمانے پر سرگرمیاں صرف اسٹوڈینٹس کو جمع کرنے میں منحصر نہیں ہے کہا: غیرملکی اسٹوڈینٹس کے سلسلے میں حضرت امام رضا علیہ السلام یونیورسٹی کا نظریہ یہ نہيں ہے کہ  دیگر یونیورسٹیوں کا مقابلہ کیا جائے یا اس سلسلے کو آمدنی کے ذریعے میں تبدیل کیاجائے  بلکہ ہمارا مقصد انٹرنیشنل پیمانے پر تعلقات کو تقویت پہنچانا ہے اور کوشش ہے کہ  ہمسایہ اور مسلم ممالک سےاسٹوڈینٹس کا ایڈمیشن اسٹوڈینٹس کی علمی بنیاد کی تقویت کے مقصد سے کیا جائے

قابل ذکر ہے کہ مشہد مقدس میں اکیسویں کتاب میلے کے انعقاد کے ساتھ ساتھ حضرت امام علی رضا علیہ السلام یونیورسٹی کی جانب سے اس میں 6 علمی نشستوں کا بھی اہتمام کیا گیا ہے ۔
   
وزٹرز کی تعداد:34
 
آپ کی رائے

نظر شما
نام
پست الكترونيک
وب سایت
نظر
...