خبر
10/25/2019
مشہد مقدس میں زائرین کی مشکلات ختم کرنے کے لئے قومی عزم و ارادہ کی ضرورت ہے

 
مشہد مقدس میں زائرین کی مشکلات ختم کرنے کے لئے قومی عزم و ارادہ کی ضرورت ہے


آستان قدس رضوی کے محترم متولی نے ملک کے تمام گورنروں سے ملاقات کے دوران اسلامی جمہوریہ ایران کے دور درازشہروں اور دنیا بھر سے مشہد مقدس تشریف لانے والے لاکھوں زائرین کو خدمات و سہولیات کی فراہمی میں درپیش ممکنہ مشکلات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ زائرین کے لئے قیام ،حرم کے اطراف میں ٹریفک اور پارکینگ وغیرہ کے مسائل و مشکلات کو دور کرنے کے لئے قومی عزم وارادہ کی ضرورت ہے ۔ 

جناب حجت الاسلام والمسلمین احمد مروی کی ایران کے صوبوں کے گورنروں اور وزارت داخلہ کے ڈائریکٹروں سے ملاقات حرم مطہر رضوی کے ولایت ہال میں منعقد  ہوئی جس میں وزیر داخلہ جناب عبد الرضا رحمانی فضلی نے بھی شرکت فرمائی۔ حجت الاسلام مروی نے دوران خطاب کہا کہ دشمن کو یہ توقع تھی کہ اقتصادی پابندیوں اور سختیوں سے اجتماعی بے چینی بڑھے گی،  قوانین کی خلاف ورزی ہوگی اورملک میں عوامی شورش برپا ہوجائےگی۔ پروردگار عالم کے لطف و کرم سے دشمن اپنے کسی بھی مقصد میں کامیاب نہیں ہو سکا اور وہ شخص جو یہ کہتا تھا کہ ’’ انقلاب اسلامی اپنے چالیس سال مکمل نہیں کر سکے گا‘‘ وہ خود اسٹیج سے غائب ہوچکا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ آستان قدس رضوی کی جائیداد  اوراثاثوں سے پتہ چلتا ہے کہ لوگوں کا اہلبیت علیہم السلام پر کس قدر گہرا ایمان اور قلبی اعتقاد ہے ۔ آستان قدس رضوی کے پاس عوام کی موقوفہ زمین و جائیداد کی صورت میں املاک بہت زیادہ ہیں  لیکن ان تمام املاک کی موجودگی کا یہ مطلب نہیں ہے کہ نقد رقومات بھی بہت زیادہ ہیں ۔

حجت الاسلام والمسلمین مروی نے گفتگو کو جاری رکھتے ہوئے گورنروں سے درخواست کی کہ آستان قدس رضوی کے اثاثوں کی جانب حساسیت دکھائیں ، ان پر خصوصی توجہ دیں اور سنجیدگی سے اسے خرد برد ہونے سے بچایا جائے،  کیونکہ آستان قدس رضوی کی ساری جائیداد اور اثاثے عوامی نذورات اور موقوفات پر مشتمل ہیں۔ 

انہوں نے صوبوں میں نمائندہ دفاترکے سلسلے میں تجدید نظر کے بارے میں وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ ہمارا ہدف یہ ہے کہ پورے ملک سے ثامن الحجج (ع) کے نام پر خدمت کا شوق رکھنے والے افراد مختلف این جی اوز کی صورت میں محروموں اور غریبوں کو خدمات فراہم کرنے کے لئے منظم کئے جائیں تاکہ خدمت کا یہ عوامی سلسلہ ہمیشہ جاری و ساری رہے اور براہ راست ہمارے انتظام و انصرام کے تحت نہ ہوالبتہ چونکہ یہ سارا کام حضرت امام علی رضا علیہ السلام کے نام سے انجام دیا جائے گا اور وہ اسے آستان قدس رضوی کے لئے انجام دیں گے اس لئے ہماری نگرانی کی بھی ضرورت ہمیشہ رہے گی اور یقینا" حسب ضرورت ہم ان کی حمایت اور مدد بھی کریں گے۔ 

مزید تفصیلات بتاتے ہوئے انھوں نے کہا کہ زائرین کو خدمات پیش کرنے کے جذبے کے تحت آستان قدس رضوی کی جانب سے زائر شہر اور زائر سرائے رضوی کا افتتاح ہوا اور مشہد مقدس کی جانب آنے والی شاہراہوں پر۲۰ مراکز کی تعمیر کی گئی ہے۔ البتہ عوامی ضرورت کے مطابق ہمارا ارادہ ہے کہ  تمام شاہراہوں پر صوبائی گورنروں کے تعاون سے مزید ۱۰۰ سے زیادہ مجموعے تعمیر کئے جائیں ۔  

جناب حجت الاسلام والمسلمین مروی نے وزارت داخلہ میں آستان قدس رضوی اوروزارت داخلہ کی کمیٹی اور گورنروں کے دفاتر کے مابین تعاون پر ایک دفتر تأسیس کرنے کی رائے دی جس کو  وزیر داخلہ نے قبول کرتے ہوئے وزارت داخلہ کے کوآرڈینیشن کے شعبے کے ڈائرکٹر کو اس پر عملدرآمد کرنے کے ذمہ دار اور رابط کے طور پرمتعارف کرایا۔   
وزٹرز کی تعداد:71
 
آپ کی رائے

نظر شما
نام
پست الكترونيک
وب سایت
نظر
...