خبر
9/4/2019
’’آستان قدس رضوی میں وقف و نذر  اور اس سے متعلق مسائل کی  شناخت پر تحقیقات  کے زیرعنوان خصوصی نشست

 
’’آستان قدس رضوی میں وقف و نذر اور اس سے متعلق مسائل کی شناخت پر تحقیقات کے زیرعنوان خصوصی نشست

  آستان قدس رضوی کے اسلامی تحقیقاتی فاؤنڈیش میں  آستان قدس میں وقف و  نذر اور اس سے متعلق مسائل کی  شناخت  پر تحقیقات کے زیرعنوان ایک خصوصی نشست کا اہتمام کیا گيا جس میں اس شعبے سے تعلق رکھنے والے ماہرین نے شرکت  کی

آستان نیوز کی رپورٹ کے مطابق؛ آستان قدس رضوی کے اسلامی تحقیقاتی فاؤنڈیشن کے سربراہ  حجت الاسلام سید محمود مرویان حسینی نے اس خصوصی نشست کے  آغاز  میں   کہا کہ اقتصادی ، سماجی ، ہنری اور ثقافتی میدان میں  اسلامی معاشرہ   کا اہم ترین ذریعہ،   وقف و نذر ہے ۔

حجت الاسلام مرویان حسینی نے   کہا  کہ کیونکہ وقف و نذر کا مسئلہ معاشرہ کا اہم ترین مسئلہ ہے  اس لئے آستان قدس رضوی کے  اسلامی تحقیقاتی فاؤنڈیشن کی کاوشوں سے فقہی، مالی، معاشرتی اور وقف و نذر کی تاریخی دستاویزات سے متعلق ۲۰  مختلف  کتابوں  اور مقالوں    کی  اشاعت کی گئی ہے   جو مارکیٹ میں آسانی سے دستیاب ہیں

ان کا کہنا تھا کہ ہم  وقف و نذر کے سلسلے میں نئی اور جدید راہوں کو تلاش کررہے ہیں  تاکہ اس  میدان میں   تمام تر ضروریات کو پورا کیا جا سکے۔

مجلس خبرگان رہبری کے رکن حجت الالسلام والمسلمین امان اللہ علی مرادی نے بھی  اس خصوصی نشست میں   اپنے خطاب میں  کہا کہ وقف و نذر کے مسائل انسانی فطرت اور  عقل  وروح  میں پائے جاتے ہیں اور   وقف و نذر  بشریت کی بقا و  دوام   اور خیر خواہی  کے امور میں اہم کردار کے حامل  ہيں    اسی لئے ضروری ہے کہ وقف و نذرکے سلسلے میں علمی کام انجام دیئے جائیں ۔

انہوں  نے  کہا کہ امید ہے کہ وقف  کے عملی و نظری مبانی کی بنیادوں  اور انسانی افکار سے استفادہ نیز  اسلامی اداروں  میں وقف کے لئے انجام پانے والے اقدامات کا  ایران میں اس سلسلے میں انجام پانے والےاقدامات کا موازانہ اور  وقف  کی تاریخ اور اس کے ماضی کا صحیح طریقے سے مطالعہ اور  ساتھ ہی وقف کے شعبے میں سبھی قومی اور کمزور پہلوؤں کا   جائزہ لے کر و قف و  نذر کو  انسانی زندگی کے مختلف  شعبوں  میں اسلام کی حاکمیت کوعملی بنانے کی راہ میں  صحیح طریقے سے  استعمال کیا جاسکے گا  

 
وزٹرز کی تعداد:46
 
آپ کی رائے

نظر شما
نام
پست الكترونيک
وب سایت
نظر
...