خبر
8/10/2019
رضوی تعلیمات کی ترویج میں آستان قدس سے وابستہ ذرائع ابلاغ کی ذمہ داریوں پر تاکید

 
رضوی تعلیمات کی ترویج میں آستان قدس سے وابستہ ذرائع ابلاغ کی ذمہ داریوں پر تاکید

 آستان قدس رضوی کے نائب متولی نے امام رضا علیہ السلام کے حرم مطہر سے وابستہ ذرائع ابلاغ کے نمائندوں اور نامہ نگاروں سے سے خطاب کرتے ہوئے ، امام رضا (ع) کی سیرت و تعلیمات کی ترویج  کے سلسلے میں ان کی ذمے داریوں پر روشنی ڈالی  

آستان قدس رضوی کے نائب متولی نے حرم مطہر رضوی  کے ذرائع ابلاغ کے نامہ نگاروں سے خطاب میں امام رضا (ع) کی سیرت کو زیادہ سے زیادہ عام کرنے کی اہمیت پر زور دیا  

آستان نیوز کی رپورٹ کے مطابق ، مصطفی خاکسار قہرودی نے صحافیوں کے قومی دن کی مناسبت سے آستان قدس رضوی کے میڈيا سینٹر کے نیوز روم میں حرم مطہر رضوی سے وابستہ ذرائع ابلاغ کے نامہ نگاروں  سے ملاقات کی انہوں نے اس موقع پر میدان صحافت کے شہداء خصوصا" شہید محمود صارمی کو خراج عقیدت پیش کیا ۔ انھوں نے اپنے خطاب میں  کہا کہ امام ہشتم (ع) کی بارگاہ کے نامہ نگار دوسرے صحافیوں کی بہ نسبت ایک مختلف اور زیادہ اہم  اور معنوی  فضا میں خدمت کررہے ہیں اور یہاں پر ان کی ذمے داریاں دوسروں کے مقابلے زیادہ سنگین ہیں اس لئے انہيں چاہئے کہ اپنی ان ذمے داریوں سے ذرہ برابر بھی غفلت نہ کريں  

آستان قدس رضوی کے نائب متولی نے کہا کہ  ایک   نامہ نگار کو چاہئے کہ وہ  اپنے ماہرانہ اور پیشہ ورانہ کام کو انجام دیتے ہوئے، سچائی اور حقیقت پسندی  کو مد نظر رکھے اور خبر کو مناسب درجہ بندی کے تحت اور کم سے کم وقت میں درست طریقے سے اور موضوع سے ہم آہنگ رکھتے ہوئے پیش کرے

خاکسار قہرودی نے معاشرے میں دینی اقدار کو مستحکم بنانے میں آستان قدس کے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کے کردار پر تاکید کرتے ہوئے کہا  کہ اس نورانی آستانہ سے وابستہ ذرائع ابلاغ  کو چاہیۓ کہ اتحاد  اور امید کی راہ دکھائیں  اور    سطحی فضاؤں میں جولانی دکھانے سے پرہیز کریں۔ 

  انھوں نے کہا کہ مثبت نکات اور خوبیوں پر نگاہ رکھنے کے ساتھ ساتھ ، موجودہ مشکلات اور نقائص پر بھی مکمل توجہ مرکوز رکھنے کی ضرورت ہے تاکہ ذمہ دار افراد کی نظروں سے مسائل پوشیدہ نہ رہیں۔ لیکن ساتھ ہی الزام تراشی اور مسائل کو بڑھا چڑھا کر پیش  نہ کیا جائے کہ مبادا  اس سے دشمنوں کو فائدہ پہنچنے لگے۔   انہوں نے یہ بھی کہا کہ صحافی کے قلم کی زیبائی اور جلوہ گری کو مبالغہ آرائی کی حدود میں داخل نہیں ہونا چاہیے، اس سلسلے میں صحافی اور رپورٹر کو  ہمیشہ دقت نظر اور بھرپور توجہ دینے کی ضرورت رہتی ہے۔ 

انھوں نے آستان قدس رضوی کے  بین الاقوامی مخاطبین اور ناظرین کو صحیح خبریں پہنچانے  کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے کہا: اس آستان مقدس میں ،ان باتوں کی کوئي اہمیت نہيں ہے کہ لوگوں کا دنیوی مقام و مرتبہ کیا  ہے اور سماج میں ان کی کیا حیثیت کیا ہے  یہاں صرف اس بات کی اہمیت ہے کہ امام رضا (ع) کی بارگاہ ملکوتی میں  وہ کیا خدمات انجام دے رہے ہيں اور آستان قدس رضوی میں بہبود کی راہ میں وہ کن تدابیر پر عمل کررہے ہیں۔

 حرم مطہر رضوی کے نائب متولی خاکسار قہرودی نے کہا: آستان قدس رضوی کا یہ پورا سسٹم  منجملہ یہاں کا میڈیا سب کے سامنے ایک نمونے کے طور پر   ہونا چاہئے اور یہ اسی وقت ہوسکتا ہے کہ جب مسائل کو درست طور پر سمجھا جائے، قدر و قیمت پر توجہ رہے، اخلاقی حدود کی پابندی ہو، صداقت ہو اور ہنر مندانہ طورو طریقوں پر چلا جائے۔

آستان قدس رضوی کے نائب متولی نے حرم مطہر سے وابستہ ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کی زحمتوں کا شکریہ ادا کرتے  ہوئے کہا کہ نامہ نگاروں کی تربیت اور ان کی مہارت سے متعلق  مسائل نیز ان کی ذاتی  مشکلات کو بھی مد نظر رکھنے کی ضرورت ہے تاکہ نامہ نگار پرسکون و مطمئن ذہنی کیفیت کے ساتھ  اپنے فرائض کو بہترین شکل میں انجام دے سکیں اور اس طرح امام رضا (ع) کی   ملکوتی بارگاہ اورزائرین اور ومجاورین کی خدمت کی روز افزوں توفیق حاصل ہوتی رہے 

اس اجلاس میں آستان قدس رضوی کے میڈیا سینٹر اور شعبہ خبر کے ڈائریکٹر  "حسن دست پروری" نے بھی اپنے ادارے کی کارکردگی کی ایک مختصر رپورٹ بھی پیش کی۔


   
وزٹرز کی تعداد:17
 
آپ کی رائے

نظر شما
نام
پست الكترونيک
وب سایت
نظر
...