خبر
1/22/2019
پاکستان کے صوبہ سندھ کے ثقافتی سربراہان نے آستان قدس رضوی کے ثقافتی مراکز کا دورہ کیا

 
پاکستان کے صوبہ سندھ کے ثقافتی سربراہان نے آستان قدس رضوی کے ثقافتی مراکز کا دورہ کیا

آستان قدس رضوی کے بین الاقوامی سینٹر کی کاوشوں سے ؛پاکستان کے صوبہ سندھ کے ثقافتی سربراہان نے مشہد مقدس سفر کےد وران آستان قدس رضوی کے ثقافتی مراکز کا دورہ کیا۔ 
آستان نیوز کے خبرنگار کی رپورٹ کے مطابق؛ یہ وفد پاکستان کے صوبہ سندھ کے ثقافتی سربران کے سات افراد پر مشتمل تھا جنہوں نے حضرت امام علی رضا علیہ السلام کے روضہ منورہ پر حاضری دینے کے ساتھ ساتھ آستان قدس رضوی کے مرکزی کتابخانہ اور میوزیم کا بھی دورہ کیا۔
جناب حیدر علی تالپور جو کہ تالپوری بادشاہت کے سلسلہ کے آخری بادشاہ کے پوتے ہیں اور ۱۶۰ گرانقدر فارسی،سندھی اور عربی خطی نسخوں کے وارث بھی ہیں ؛ اس وزٹ کے دوران خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ آستان قدس رضوی کا انسان شناسی اور قرآن کریم کا میوزیم کو خوبصورتیوں اور عجائب سے بھرا ہوا ہے۔ 
گفتگو کو جاری رکھتے ہوئے کہا: اس وفد کی آستان قدس رضوی کی ثقافت و تعلقات تنظیم کے سربراہ جناب محمد اورعی کریمی اور آستان قدس رضوی کے دستاویزاتی سینٹر و میوزیم و کتابخانہ کے سربراہ جناب ڈاکٹر مجتبیٰ بذر افشاں سے ایک نشست بھی منعقد ہوئی۔
پاکستان کے صوبہ سندھ کے ثقافت و سیاحت اور آثار قدیمہ کے ڈپٹی ڈائریکٹر جناب غلام سرورچنرنے نشست کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہا: پاکستانی یونیورسٹیوں میں اسٹوڈنٹ پاکستان کی قومی زبان سیکھنے کے بعد سب سے زیادہ ترجیح فارسی زبان کو دیتے ہیں اور اس کے بعد عربی زبان کو۔
انہوں نے بتایا: اسلامی جمہوریہ ایران کے ثقافتی و تاریخی گذشتہ کو مدّ نظر رکھتے ہوئے اس زبان کو سیکھنے کی بھرپور کوشش کریں گے تاکہ آئندہ سفر کے دوران فارسی زبان میں بات چیت کر سکیں۔ 
اس نشست کے دوران آستان قدس رضوی کے مرکزی میوزیم اور کتابخانہ کا انگریزی زبان میں فلم کے ذریعہ تعارف بھی کروایا گیا۔ 
اس نشست کے اختتام پر پاکستان کے صوبہ سندھ میں سندھی ادب کے پبلکیشکنز مرکز کے سربراہ جناب اسکندر علی شاہ نے صوبہ سندھ کے خطی نسخوں کی ایک فہرست آستان قدس رضوی کو ھدیہ کی۔ 
   
وزٹرز کی تعداد:33
 
آپ کی رائے

نظر شما
نام
پست الكترونيک
وب سایت
نظر
...