خبر
8/27/2018
حضرت امام علی علیہ السلام؛ کاتب وحی

آستان قدس رضوی کے قرآنی میوزیم کے خزانے سے ایک صفحہ کا تعارف،  
حضرت امام علی علیہ السلام؛ کاتب وحی

تقریبا 1440 سال پہلے قرآن کریم دین الہی کی آخری آسمانی کتاب حضرت محمدصلی اللہ علیہ وآلہ وسلم  پر نازل ہوئی اور23 سالہ مدت میں اس کا نزول تدریجا پایہ تکمیل کو پہنچا۔
اس کے بعد بہت سے افراد  حافظین و کاتبین قرآن کریم کے  عنوان سے مسلمانوں کے درمیان مشہور ہوگئے کہ جوقرآن عظیم کی آیا ت کی حفاظت کرتے  اور اس کی کتابت میں مشغول رہتے تھے ۔ ان حافظین و کاتبین قرآن کریم میں سے ایک عظیم ہستی کا نام علی ابن ابی طالب علیہ السلام ہے کہ جو شیعوں کے پہلے امام تھے۔
آستان نیوز کے خبرنگار کی رپورٹ کے مطابق، آستان قدس رضوی کے قرآنی میوزیم میں خطی و قدیمی قرآن کریم دیدار کرنے والوں کے حضور رکھے ہوئے ہیں کہ جو 1008 ہجری قمری میں شاہ عباس صفوی اور شیخ بہائی کے ہاتھوں وقف نامہ تحریر ہوکر حضرت امام علی رضا علیہ السلام کے روضہ منورہ میں  رکھے گئے ہیں۔
وقف نامہ کی عبارت کہ جو شیخ بہائی کے ہاتھوں جمادی الاول 1008ہجری میں تحریر ہوئي ہے ، اس طرح ہے : «هوالحق، هذا الجزء من القرآن المجيد الذّی هو بشريف خط سیّد الاوصياء و حجه الله علی اهل الارض و السّماء نفس الرّسول و زوج البتول و ابی السبطين و امام الثقلين المخصوص باختصاص انّما وليكم الله المعزز باعزاز من كنت مولاه فعلیّ مولاه. سلام من الرحمن نحو جنابه / فانّ سلامی لايليق ببابه وقف علی الروضه المنوره المقدسه المطهره الرضيه الرضويه علی ساكنها الف صلوه وسلام وتحیّه والواقف هو تراب اعتابها والمفتخر بخدمه بابها ... وكان ذلك فی شهر جمادی الاول سنه الف وثمان من الهجره، حرّره تراب اقدا ‍(بريدگی) العتبه المقدسه الرضويه بهاء الدين محمد العاملی عفی عنه.»
اس قرآن کریم کے ہرصفحہ پر پندرہ سطریں اعراب و اعجام و تنوین کے ساتھ تحریر ہیں کہ جن کا سائز 16× ۲۵ سینٹی میٹر ہے۔ قرآن کریم کے آخر سے پہلے دوصفحوں پر حضرت امام علی علیہ السلام سے منسوب دستخط موجود ہیں کہ جو ایک گوشے میں ہیں اس کا پہلا صفحہ 9سطری اور دوسرا صفحہ 8 سطری ہے۔ اس قرآن کریم کے آخری صفحہ پر صرف دو سطریں  ہیں ان میں پہلی سطر میں یہ عبارت ہے " کتبہ علی بن" اور دوسری سطر میں "ابی طالب" تحریر ہے۔ یہ نفیس اثر ، کتابت کے لحاظ سے اس میوزیم کے دوسرے قرآنی آثار کی نسبت زیادہ دیکھنے کے قابل ہے۔ یہ قرآن  بے نظیر مسودہ  خط کوفی میں 15 سطروں پر مشتمل 69 اوراق میں ہےچنے کے رنگ  میں ہرن کی کھال پر تحریر،سائز 32×23 سینٹ میٹراور تیماج سے جلد سازی ہوئي ہے۔ اس قرآن کریم میں سورہ ہود سے سورہ کہف (12 رز 16 پارہ)تک ہے کہ جو سورہ ہود کی بسم اللہ سے شروع ہوا ہے اور سورہ کہف کی آیت نمبر110 "۔۔۔ولایشرک بعبادہ ربہ احدا"  اور " کتبہ علی ابن ابی طالب " پر ختم ہوا ہے ۔  
وزٹرز کی تعداد:271
 
آپ کی رائے

نظر شما
نام
پست الكترونيک
وب سایت
نظر
...