خبر
6/10/2019
آستان قدس رضوی کے تمام امور کا  بنیادی اصول دینی تربیت اور زائرین کی خدمت ہے  ،  نائب متولی آستان قدس

 
آستان قدس رضوی کے تمام امور کا بنیادی اصول دینی تربیت اور زائرین کی خدمت ہے ، نائب متولی آستان قدس

آستان قدس رضوی کے نائب متولی مصطفی خاکسار قہرودی  نے   کہا  ہے کہ زائر ین کی خدمت   اور  دینی تربیت پر توجہ   آستان قدس رضوی کے تمام امورکا بنیادی  اصول ہے

آستان نیوز کی رپورٹ کے مطابق  حرم مطہر رضوی کے ولایت ہال میں آستان قدس رضوی کے  نئے نائب متولی  مصطفیٰ خاکسار قھرودی   کو باضابطہ طور پر متعارف  کرانے کی  تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں خود  نائب متولی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اسلام، شیعیت،  اسلامی انقلاب ، حضرت امام خمینی(رہ)،رہبر   انقلاب اسلامی  اور شہداء کے معزز و محترم گھرانوں کے سبب ہمیں جو نعمات ملی ہیں ان کی وجہ سے ہم اس نظام کے مرہون منت  ہیں  ان کا کہنا تھا کہ میری ہمیشہ یہ کوشش رہی ہے کہ کسی نہ کسی طرح عوام اور اس اسلامی مملکت کا کچھ نہ کچھ حق ادا کر سکوں۔

انہوں نے کہا کہ    ایران کے مقدس  اسلامی جمہوری نظام  میں جو چند سال مجھے خدمت کا موقع ملا اس میں میری ہمیشہ کوشش رہی کہ خدمت کے ذریعہ ملک و ملت کا کچھ   حق ادا کروں اور  حضرت امام علی بن موسیٰ الرضا علیہ السلام کی مقدس بارگاہ میں خدمت کی ذمہ داری نہایت سنگین ہے اسی وجہ سے اس نورانی بارگاہ کے تمام خدمتگزاروں کی ذمہ داری کئی گنا زیادہ ہے۔

آستان قدس رضوی کے نائب متولی نے اس بات پر زور دیا کہ انسان کے لئے سخت ترین اور اہم ترین کام اپنی  ذمہ داری پر عمل کرنا ہے،انہوں نے کہا کہ آستان قدس رضوی کا ادارہ امامت کا ادارہ ہے جو کہ امام کی ظاہری زندگی کے ساتھ کوئ فرق نہیں رکھتا اس لئے اس میں کام کرنے والے تمام عہدیداران  اور خدمتگزار اس خدمت کو غنیمت سمجھیں ا ن کا کہنا تھا کہ  اس   بہترین موقع سے استفادے کا معیار    حضرت ثامن الحجج علیہ السلام کے ملکوتی و نورانی وجود سے قرب حاصل کر کے فوز عظیم پر فائزہونا ہے۔

آستان قدس کے نائب متولی نے  کہا کہ اسلامی انقلاب کو چالیس سال کا عرصہ گزر چکا ہے اور اب وہ دوسرے مرحلے میں یعنی خود سازی، معاشرتی   تربیت  اور تمدن سازی میں داخل ہوچکا ہے اور ان تینوں اہداف کے حصول کے لئےآستان قدس رضوی میں بہترین مواقع پائے جاتے ہیں اور انشاء اللہ یہ عظیم آرگنائیزیشن یا ادارہ  ان اہداف و مقاصد کو پورا کرنے اور جدید اسلامی تہذیب کی بنیاد رکھنے اور حضرت امام زمان(عج) کے خورشید  ولایت   کے طلوع ہونے کی زمین ہموار کرنے  کے لئے اہم قدم اٹھا سکتا ہے۔

اسلامی تہذیب کو وجود میں لانے میں دینی تربیت ایک اہم عنصر ہے
 آستان قدس کے نائب متولی  خاکسار قھرودی نے  اپنے خطاب میں  ایسی دینی تربیت کو جو اہلبیت علیہم السلام کی سیرت و منطق کے عین مطابق ہو اسلامی تہذیب و تمدن کی تشکیل کا اہم عنصر قرار دیتے ہوئے کہا کہ حضرت امام علی رضا علیہ السلام کی نورانی بارگاہ میں پائے جانے والے مواقع سے استفادہ کرتے ہوئے زائرین کی دینی تربیت، اخلاقیات پر توجہ،اسلامی طرز زندگی و معنویت کی ترویج آستان قدس رضوی کا بنیادی فریضہ ہے ۔

انہوں نے کہا کہ رہبر   انقلاب  اسلامی کی ہدایات اور آستان قدس رضوی کے متولی کی تاکیدات کو مدّ نظر رکھتے ہوئے زائر محوری اور زائرین کی تربیت اور معرفت میں اضافہ کا بنیادی اصول  آستان قدس رضوی کے تمام امور پر حکمفرما  ہے اس لئے درمیانی مدت اور طویل مدت کے تمام پروگراموں اور شیڈول کو بناتے ہوئے اس اصول کو مدّ نظر رکھا جائے۔

خادموں کو رضوی کردار و رفتار کا مظہر بن کر زندگی بسر کرنی چاہئے
آستان قدس رضوی کے نائب متولی نے کہا کہ حرم مطہر رضوی میں تمام امور منصوبہ بندی  کے ساتھ اور منظم طریقے سے انجام پانے   چاہئيں   اورسبھی   خدام سیرت  رضوی  کے مظہر بن کر رہیں   تاکہ زائرین اطمینان و سکون  کے  ساتھ    زیارت سے بہترین طریقے سے فیض حاصل کر سکیں۔

انہوں نے کہا کہ خدمت کے دوران زائرین کی راہنمائی اور نظارت کے ساتھ ساتھ نظم و ضبط انتہائی اہم ہے    آستان قدس کے نائب متولی  نے  کہا کہ حرم رضوی کے توسیعی  منصوبوں میں زائرین کو بہتر خدمات فراہم کرنے کو مدّ نظر رکھا جائے گا ان کا کہنا تھا کہ زائرین کے ساتھ خادموں کے حسن سلوک  میں مزید بہتری، زائرین کی تجاویز پر توجہ اور حرم کی متبرک غذا کو مزید معیاری بنانا وہ جملہ امور ہیں    جن پر خاص توجہ دی جائے گی۔

  خاکسار قھرودی کا کہنا تھا کہ   ، ضروری امور کے لئے منصوبہ  بندی  اور بحرانی حالات میں صحیح منیجمنٹ ، حرم رضوی کے ماہرین اور بیرونی ماہرین کی مدد سے مناسب راہ حل کی تلاش اور زائرین کی جانب سے اعزازی خدمات فراہم کرنے کا جائزہ وغیرہ وہ  دیگر موضوعات ہیں جن پر توجہ دی جائے گی    

آستان قدس رضوی کے سابق  نائب متولی سید رضا فاطمی امین نے بھی تقریب  میں اپنے خطاب میں    ملک کے معیشتی مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ آج دشمن اقتصادی اور معیشتی میدان میں جنگ لڑ رہا ہے ،آستان قدس رضوی ایک عوامی و فلاحی اور قابل  اعتماد ادارہ کی حیثیت سے معیشتی مسائل کو حل کرنے میں مؤثر کردار ادا کر سکتا ہے اور اس میدان میں یادگار اقدامات انجام دے سکتا ہے   ۔  
وزٹرز کی تعداد:26
 
آپ کی رائے

نظر شما
نام
پست الكترونيک
وب سایت
نظر
...