خبر
3/12/2019
جرمن   دانشوروں  کا  مشہدمقدس   کا  سفر اور حرم مطہر رضوی کی زیارت

 
جرمن دانشوروں کا مشہدمقدس کا سفر اور حرم مطہر رضوی کی زیارت

آستان قدس رضوی کے ادارہ بین الاقوامی امور کی دعوت پر  جرمنی کے کچھ  دانشوروں  اورمذہبی و ثقافتی شخصیات  نے حضرت امام علی رضا علیہ السلام کے روضہ منورہ  کا دیدار کیا۔
آستان نیوز کے نمائندے کے مطابق   جرمنی  کے   ادیان و فلسفہ کے  ماہر تین دانشور  پہلی مرتبہ مشہد مقدس آئے اور حضرت اما م علی رضا علیہ السلام کے روضہ منورہ کی زیارت سے مشرف ہوکر انہوں نے  حرم مطہررضوی کے مرکزی میوزیم کو قریب سے دیکھا
اس وفد میں سے دو افراد آرتھوڈوکس مکتب سے تعلق ر کھتے تھے  جبکہ ایک پروٹسٹنٹ پادری  تھا  ۔ پروٹسٹنٹ پادری اور علم فلسفہ و ادیان  کے ماہر ائنرفلیپ نے اس موقع پر ا عتراف کیا کہ : یہ زیارت اور سفر  بہت اچھا رہا، اور ہم اس مقدس مقام  کی تاریخ سے آشنا ہوئے ۔ انہوں نے کہا کہ  یہ کہنا مناسب ہوگا کہ ایرانی فن معماری میں پائی جانے والی روحانیت و معنویت    یقینا آرام و سکون کا سبب قرار پاتی ہے۔
انہوں نے کہا پچھلے برسوں کے دوران  حضرت امام علی رضا علیہ السلام کے حرم مطہر  کے پروجیکٹ   کی مسلسل توسیع ہمارے لیے بہت زیادہ جذاب و قابل دید تھی، اور حقیقت میں ایرانی ثقافت و اصالت  اہمیت کی حامل ہے  اور یہ یقین سے کہا جاسکتا ہے کہ اس ثقافت کی جڑیں قدیم تاریخ میں پیوست ہیں   اور اس کی تاریخ بہت  ہی پرانی ہے
فلیپ نے مزید کہا:  کہ میوزیم کو دیکھنے کے موقع پر تین سنہری محرابوں کے نام کا فن تعمیر کا شاہکار       ہمارے لیے قابل توجہ تھا  کہ جو اسلامی اور روایتی فن تعمیر اور ٹائل آرٹ کا نمونہ ہے  اس لیے کہ یہ معماروں کی ارادت و عقیدت کا مظہرہے۔
قابل ذکر ہے کہ آستان قدس رضوی کا    ادارہ  بین الاقوامی امور  آستان قدس رضوی کےمتولی  کے حکم  کے مطابق تقریبا دو سال سے  دنیا بھر کے تمام ثقافتی اداروں سے رابطہ بر قرار کررہا ہے    
وزٹرز کی تعداد:42
 
آپ کی رائے

نظر شما
نام
پست الكترونيک
وب سایت
نظر
...